ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کی سوانح عمری، سکینڈلز، کامیابیاں، پراسرار موت

Biography of Dr. Amir Liaquat Hussain, Scandals, Achievements, Mysterious Death,

0 12

عامر لیاقت حسین پاکستان کے ایک معروف سیاست دان اور براڈکاسٹر ہیں۔ عامر لیاقت حسین سابق وزیر مملکت برائے مذہبی امور اور جیو ٹی وی کے مقبول ٹی وی پروگرام عالم آن لائن کے اینکر بھی تھے۔

6 اگست 2010 کو، انہوں نے اے آر وائی کے مذہبی ٹی وی چینل کیو ٹی وی (اے آر وائی) کے ایگزیکٹو کے طور پر اے آر وائی ڈیجیٹل نیٹ ورک میں باضابطہ شمولیت اختیار کی عامر لیاقت حسین 5 جولائی 1971 کو کراچی میں پیدا ہوئے۔

عامر لیاقت حسین نے 2002 کے عام انتخابات میں پرویز مشرف کی نگرانی میں اور ان کی الحاق شدہ جماعت متحدہ قومی موومنٹ کے پلیٹ فارم سے الیکشن لڑا تھا۔

پیشہ ورانہ کیریئر

وہ مختلف اخبارات میں بطور ایڈیٹر اور کالم نگار کے طور پر 12 سال سے زائد عرصے تک پرنٹ میڈیا سے منسلک رہے۔ میں
اپنے کیریئر کے آغاز میں انہوں نے ریڈیو میں بھی کام کیا۔ میزبان کے طور پر انہوں نے اپنا پہلا پروگرام جیو ٹیلی ویژن نیٹ ورک پر کیا۔

کامیابیاں

2008 میں سعودی عرب کے بادشاہ شاہ عبداللہ نے انہیں ایک بین المذاہب کانفرنس میں مدعو کیا جو مکہ مکرمہ میں منعقد ہوئی تھی۔

وزیر کے عہدے سے استعفیٰ

4 جولائی 2007 کو عامر لیاقت حسین نے متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) کے ساتھ شدید اختلافات کے بعد وزیر مملکت برائے مذہبی امور کے ساتھ ساتھ اپنی قومی اسمبلی کی نشست سے استعفیٰ دے دیا۔ پارٹی کے سرکاری بیان کے مطابق، پارٹی عامر کی طرف سے لال مسجد اور سلمان رشدی پر دیے گئے بیانات سے ناخوش تھی۔

لیاقت حسین کی بیویاں


ڈاکٹر عامر لیاقت حسین ایکپاکستانی ٹیلی ویژن شخصیت اور سیاست دان تھے جنہوں نے تین بار شادی کی۔ ان کی پہلی بیوی بشریٰ عامر تھیں جن سے ان کا ایک بیٹا اور ایک بیٹی تھی۔

اس کے بعد اس نے طوبہ انور سے شادی کی جس سے ان کا کوئی بیٹا یا بیٹی نہیں تھا۔ ان کی تیسری بیوی سیدہ دانیہ تھیں جن سے ان کی کوئی اولاد بھی نہیں تھی۔ سیدہ دانیہ اور ڈاکٹر عامر لیاقت حسین نے ایک دوسرے کے خلاف انتہائی شرمناک ویڈیوز جاری کر دیں۔ دانیہ سے علیحدگی کے بعد وہ پاکستان چھوڑنے جا رہے تھے۔

عامر لیاقت حسین انتقال کر گئے۔

عامر لیاقت کا انتقال 9 جون 2022 کو کراچی، پاکستان میں ہوا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق جاوید نامی اس کا نوکر درد سے چیخنے کے بعد اپنے کمرے کی طرف بڑھا لیکن دروازہ بند تھا۔ مالک عامر لیاقت کی جانب سے کوئی جواب نہ ملنے پر نوکر نے دروازہ توڑا تو اسے اپنے کمرے میں بے ہوش پایا۔

عامر لیاقت حسین کی مجموعی مالیت

عامر لیاقت حسین کی مجموعی مالیت کا تخمینہ 2022 تک INR 10-20 کروڑ کے لگ بھگ تھا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.